تحریک عدم اعتماد: مبینہ دھاندلی کی ویڈیو پر بیرسٹر سیف کی وضاحت

ایوان بالا میں چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے خلاف تحریک عدم اعتماد پر ووٹنگ کے دوران پریزائیڈنگ افسر بیرسٹر سیف کی ووٹوں کی گنتی کے حوالے سے متنازع ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی۔

خیال رہے کہ اپوزیشن لیڈر راجا ظفر الحق کی جانب سے چیئرمین سینیٹ کے خلاف پیش کی گئی قرارداد پر 64 اراکین نے حمایت کی تھی جس کے بعد تحریک عدم اعتماد پر خفیہ رائے شماری کا آغاز کیا گیا۔
چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی اور ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے خلاف عدم اعتماد کی تحاریک ناکام ہوگئیں جس کے ساتھ دونوں اپنے اپنے عہدوں پر برقرار رہیں گے۔

پریزائڈنگ افسر اور ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما بیرسٹر سیف نے ووٹنگ پر فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ قرارداد کے حق میں 50 ووٹ ڈالے گئے، منظوری کے لیے مطلوبہ 53 ووٹ نہ ملنے کی وجہ سے یہ قرارداد مسترد کی جاتی ہے جبکہ تحریک عدم اعتماد کی مخالفت میں 45 ووٹ پڑے اور 5 ووٹ مسترد ہوئے۔
تاہم ووٹنگ کے عمل کے بعد بیرسٹر سیف کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی ہے جس میں انہیں ووٹوں کی گنتی کے دوران قرارداد کے حق میں 54 ووٹ آنے کے الفاظ ادا کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔
ڈان نیوز کے مطابق سوشل میڈیا پر وائرل اس ویڈیو کے حوالے سے اپنے وضاحتی بیان میں بیرسٹر سیف نے کہا کہ مجھے خود یاد نہیں کہ میں کیا پوچھ رہا تھا۔

ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما نے کہا کہ میرے خیال سےمیں مجموعی ووٹوں کی تصدیق کر رہا تھا لیکن اگر کسی کو اعتراض ہے تو درخواست دے کر کارروائی کا ریکارڈ دیکھ سکتا ہے۔

مزید پڑھیں:  حکومت جانے میں صرف 6 ماہ رہ گئے، آصف زرداری کا دعویٰ

انہوں نے کہا کہ اپوزیشن دوسروں پر انگلیاں اٹھانے سے بہتر ہے کہ اپنے گریبان میں خود جھانکے۔